گھی صحت کے لئے فائدہ مند یا نقصان دہ ؟

کیا گھی صحت کے لیے فائدہ مند ہوتا ہے ؟ یہ وہ سوال ہے جو بیشتر افراد کے ذہن میں ہوتا ہے اور اکثر افراد اسے نقصان دہ سمجھتے ہیں۔

مگر کیا واقعی گھی صحت کے لیے نقصان دہ اور آپ کو بیمار بناسکتا ہے؟

تو اس کا جواب یہ ہے کہ ایسا نہیں درحقیقت طبی سائنس نے ان خدشات کو رد کیا ہے بلکہ اسے روزمرہ کی غذا کا حصہ بنانا چاہئے۔

اس کے بہت فوائد ہیں جو کہ درج ذیل ہیں۔

گھی نظام ہاضمہ کو بہتر بناتا ہے اور یہ معدے کے ان ایسڈز کے لیے مددگار ثابت ہوتا ہے جو کھانا ہضم کرنے میں مدد دیتے ہیں جبکہ یہ جسمانی سستی دور رکھنے کے لیے بھی فائدہ مند ہے۔

گھی کا استعمال جسم کو وٹامن اے فراہم کرتا ہے جو بینائی کے لیے ضروری ہوتا ہے۔

اور اگر یہ فکر ہے کہ گھی کھانے سے کولیسٹرول بڑھ سکتا ہے تو یہ جان لیں کولیسٹرول کی 2 اقسام ہوتی ہیں، ایک صحت کے لیے فائدہ مند اور نقصان، گھی میں صحت کے لیے فائدہ مند کولیسٹرول ہوتا ہے جو جسم کو فائدہ پہنچاتا ہے مگر اعتدال سے استعمال ضروری ہوتا ہے۔

گھی کو چہرے پر لگانا اسے جگمگانے میں بھی مدد دیتا ہے۔

جسمانی وزن میں کمی کی کوشش کے حوالے سے بھی اس کا استعمال فائدہ مند ہوتا ہے، خصوصاً دیسی گھی مددگار ہوتا ہے۔

البتہ مٹھائیوں میں موجود گھی موٹاپے کا باعث بن سکتا ہے، اس کے مقابلے میں روزمرہ کی غذا میں اس کی شمولیت فائدہ مند ہوتی ہے۔

صحت کے لیے فوائد سے ہٹ کر بھی گھی کا ایک اور فائدہ یہ ہے کہ اس کو محفوظ کرنا آسان ہوتا ہے جبکہ یہ آسانی سے خراب نہیں ہوتا۔

نیند کی کمی، ذہنی تناﺅ یا بہت زیادہ کام کرنے کے نتیجے میں آنکھوں کے گرد سیاہ حلقے ابھر آتے ہیں، مگر گھی کی مدد سے ان سے فوری نجات پائی جاسکتی ہے۔ سونے سے قبل نرمی سے گھی کی کچھ مقدار کو آنکھوں کے ارگرد لگائیں، جس سے بہت جلد سیاہ حلقوں سے نجات پانے میں مدد ملے گی۔

Share it!

Share on facebook
Share on whatsapp
Share on twitter
Share on email
Share on reddit